Jaag Kashmir News


Jaagkashmir.com urdu news dadyal mirpur azad kashmir

(جاگ کشمیر نیوز )                                   

 کشمیر میرا ہے 

آزادی کی خواہش اس پار بھی اوراُس پار بھی کشمیریوں کے دلوں میں بس رہی ہے۔ مگر کون دلوائے گاآزادی ؟کیسے ملے گی آزادی؟کب ملے گی آزادی؟ ایک پاکستانی مقبوضہ کشمیر اورایک بھارتی مقبو ضہ کشمیر ۔بھارت نے 4اکتوبر 1947کو کشمیر کا ایک ٹکڑا مہاراجہ ہری سنگ سے حاصل کیا تو 24اکتوبر 1947کو پاکستان نے قبائلی اور فوج کے افسران کو بھیج کر کچھ حصے پر قبضہ کر لیا ۔بھارت کو لالچ اُس کشمیر کا اور پاکستان کولالچ اِس کشمیر کاہے لالچ کی حد یہاں تک پہنچ گئی ہے کہ کشمیری عوام کا خیال کسی ایک کو بھی نہیں رہااور آج تک لالچ کی ہوس میں  پِس رہی ہے تو صرف عوام اس کشمیر کی اور اُس کشمیر کی ۔کشمیر تو ایک ہونا چاہیے اور خود مختار ہونا چاہیے مگر کیا وجہ ہے کہ نہ بھا رت پیچھے ہٹنے کا نام لیتا ہے نہ پاکستان ۔کہا ںہے اقوام متحدہ جو انسانی حقوق کی حفاظت کیلئے بنا تھا؟ کشمیر تو خوبصورتی میں اپنی مثال آپ ہے چاہے وہ پاکستان کے قبضے میں ہو یا بھارت کے قبضے میںکشمیر جنت جیسی خوبصورت سر زمین ہے ۔پاکستانی مقبوضہ کشمیر کے باسیوں کی ایک بڑی تعداد بیرون ملک مقیم ہے جس کے زر مبادلہ سے پاکستانی بنکوں کی کمر مضبوط ہورہی ہے ،اس کشمیر میں پہاڑ معدنیات سے بھرے پڑے ہیں جو صرف پاکستان کے کام آ رہے ہیں۔ جبکہ بھارتی مقبوضہ کشمیر ہندوستان کی فلم انڈسٹری کو چلانے میں اہم کردار اادا کر رہا ہے بھارتی مقبوضہ کشمیر کے پہاڑوں کی معدنیات بھی بھارت کو مجبور کرتی ہیں کہ وہ کشمیر پر اپنا تسلط قائم رکھے۔بھارت اور پاکستان کشمیر کی جنت جیسی خو بصورت سرزمین پر قبضہ کر کے اس کے وسائل لوٹنا چاہتے ہیں اور امریکی سامراج دونوں ممالک کو جنگ کی حالت میں رکھ کر اپنے مفادات لے رہا ہے بھارت اور پاکستان کی ترقی پسند اور سوشلسٹ پارٹییز کشمیر کی آزادی اور خودمختاری کی حمایت کرتی ہیں ۔ یہاں پر ایک اور نقطہ نظر آتا ہے کہ بھارتی مقبوضہ کشمیر کشمیریوں پر اتنا ظلم کیوں کرتا ہے اور کشمیر میں7لاکھ فوج کیوں مسلط ہے ۔پاکستان تو صرف کشمیر کو پیسے کا رگڑہ دیتا ہے اس کشمیر میں تو صرف منگلا پل کے پارپاکستان جانے والے کشمیریوں کو کشمیری ہونے کا ٹیکس دینا پڑتا ہے ۔جسم پر کوڑے ماریں جائیں ،بیلٹ گن کا استعمال معصوم جانوں پر کیا جائے یا غریب اور مفلس شخص کی اولاد کا حق چھین لیا جائے حساب تو برابر ہے پھر کشمیر یہ ہو یا وہ ظلم برابر ہو رہا ہے اوردونوں ہی کشمیر زبردستی مسلط ہیں اِس پار بھی اور اُس پار بھی ۔کشمیر تو ایک ہے چاہے وہ بھارت کے قبضے میں ہو یا پاکستان کے قبضے میں کشمیر صرف کشمیریوں کا ہے کشمیری ایک قوم ہیں اور 80فیصد کشمیری خودمختاری چاہتے ہیں ان دونوں ممالک کے ساتھ چین بھی کشمیریوں کا وارث بنا ہوا ہے اس وقت بھارت کشمیر کے سب سے بڑے حصے یعنی 41342مربعہ میل پر پاکستان 32090اور چین 11039مربع میل پر قابض ہیں۔کشمیر میں رائے شماری پر نہ پاکستان کبھی سنجیدہ ہوا اور نہ ہندوستان ۔دونوں ممالک نے کشمیریوں کو غلام بنایا ہوا ہے اور ان کا ہر فیصلہ اپنی مرضی سے کرتے ہیں ۔پاکستانی مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کے وزیراعظم کا انتخاب پاکستان کرتا بیوروکریٹس پاکستان کی مرضی سے بنتے ہیں اور بھارتی مقبوضہ کشمیر میں بھی صورتحال ایسی ہی ہے کشمیریوں کو اس وقت تک آزادی نہیں ملے گی جب تک کشمیری عوام دوسروں سے لگائی امیدیں چھوڑ نہیں دیتی کشمیر کو آزادی پاکستان اور بھارت کے پیچھے چھپنے والے لیڈر کبھی نہیں دلوائیں گے اور نہ ہی اقوام متحدہ دلوائے گاکشمیر آزادی جب بھی ملی باغی ہی دلوائیں گے اسی وجہ سے نہ اِس کشمیر میں باغیوں کو انتخابات میں حصہ لینے دیا جاتا ہے اور نہ اُس کشمیر میںکیونکہ بھارت اور پاکستان جانتے ہیں کہ جب باغیوں کی آواز دنیا میں نکلی تو ذہنی اور جسمانی غلام بھی آزادی مانگیں گے اورپھر چاہے پائوں میں بیڑیاں ہوں ،ہاتھوں میں ہتھکڑیاں ہوں اور جسم جکڑے ہوئے ہوں ہر شخص آزادی کا طلبگار ہوگا اوربھارت اور پاکستان خالی ہاتھ رہ جائیں گے۔

                   جو ڈر جائے سامراج سے وہ دل نہیں رکھتا میں کشمیر کا بیٹا ہوں غلامی سے نفرت ہے مجھے

 


Next News Previous News
By Waqas Ch
30/08/2016 263 views

Leave A Comment