Jaag Kashmir online news from Dadyal, Dudyal, Mirpur and Azad Kashmir
Jaag Kashmir online news from Dadyal, Dudyal, Mirpur and Azad Kashmir Sat, 25 Feb 2017

فون پر صرف uc browser میں کھولیں

Use UC Browser to open on mobile.

News from Dadyal, Mirpur and all Azad Kashmirآزاد کشمیر کی ووٹر لسٹوں میں مسلم و غیر مسلم میں فرق ہونا !ہائی کورٹ جلد کیس کا فیصلہ کر ے گی :پوری دنیا میں آزاد کشمیر !

نے یہ خبر 2017-01-10 کو pm10:25 پرڈڈیال کی کیٹیگری میں پوسٹ کی اور ابھی تک اس کو 32 قارئین نے پڑھا ہے۔
 

Jaagkashmir.com urdu news dadyal mirpur azad kashmir

ڈڈیال (مانیٹرنگ ڈیسک نیوز)

تحریک تحفظ ختم نبوت آزادکشمیر کوٹلی کے راہنماء ڈاکٹر ابرار احمد مغل ، ناظم مولانا عبد الرازق نے گزشتہ روز ''  صحافیوں سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آزادکشمیر کی ووٹر لسٹوں میں مسلم و غیر مسلم کا فرق نہ ہونا مذہبی جماعتوں کے لیے لمحہ فکریہ ہے ، قادیانی شریعت اور آئین کی روشنی میں غیر مسلم ہیں لیکن آزادکشمیر کی ووٹر لسٹوں میں ان کا شمار مسلمانوں کے ساتھ کیا گیا ہے جو آئین اور شریعت کی توہین ہے   تحریک کی جانب سے چیف الیکشن کمشنر کی توجہ تحریری طور پر اس طرف مبذول کرائی گئی جس کے جواب میں  چیف الیکشن کمشنر نے اس بات کی وضاحت کی کہ آزاد کشمیر کے آئین میں مسلم و غیر مسلم کی واضح تعریف نہیں ہے جس کی وجہ سے الیکشن کمیشن آئین سے ہٹ کر اس مطالبے پر عمل کرنے سے قاصر ہے ، اس سلسلہ میں متعلقہ فورم سے رجوع کیا جائے  ڈاکٹر ابرار احمد مغل  نے کہا کہ پوری دنیا میں آزادکشمیر اسمبلی کو یہ اعزاز حاصل ہے جس نے سب سے پہلے منکرین ختم نبوت قادیانیوں کو غیر مسلم اقلیت قرار دیا تھا لیکن آج تک وہ قرار داد آئین کا حصہ نہ بن سکی   آزادکشمیر کے آئین میں عقیدہ ختم نبوت کے حوالے سے قانونی پیچیدگیاں موجود ہیں اور تحریک گزشستہ کئی سالوں سے حکومت آزادکشمیر سے اس سقم کو دور کرنے کے لیے مطالبہ کرتی آئی ہے لیکن حکومت نے اس پر کوئی توجہ نہیں دی ،جس کے بعدتحریک کے صدر قاری عبد الوحید قاسمی کی مدعیت میں حکومت آزادکشمیر کے خلاف ہائیکورٹ میں رٹ دائر کر دی ہے اور تحریک تحفظ ختم نبوت آزادکشمیر پوری ریاست کے مسلمانوں کی جانب سے مدعی بن کر حکومت کے خلاف عدالت عالیہ کے پاس گئی ہے تحریک کے مرکزی صدر نے ہائیکورٹ سے رجوع کیا اور ہمیں پوری امید ہے کہ ہائیکورٹ جلد اس کیس کا فیصلہ کرے گی  انہوں نے کہا کہ ہماری قادیانیوں کے ساتھ کوئی ذاتی عداوت یا جھگڑا نہیں لیکن عقیدہ ختم نبوت اور ناموس رسالت  پر ڈاکہ زنی کرنے والوں کو کسی صورت کھلی چھٹی نہیں دی جا سکتی  جو قادیانی تائب ہو کر اسلام قبول کر لیتے ہیں وہ ہمارے بھائی ہیں ان کا تحفظ ہماری ذمہ داری ہے،   ڈاکٹر ابرار احمد مغل نے کہا کہ  پاکستان کے آئین اور ووٹر کے حلف نامہ میں عقیدہ ختم نبوت کا بڑی وضاحت کے ساتھ ذکر موجود ہے اور پاکستان میں مسلم و غیر مسلم کی ووٹر فہرستیں بھی الگ الگ ہیں جس کی وجہ سے کوئی قادیانی اور غیر مسلم شخص مسلمانوں کے حقوق پر ڈاکہ نہیں ڈال سکتا جب کہ آزادکشمیر میں کوئی قانون نہ ہونے کی وجہ سے قادیانی و دیگر غیرمسلم کی فہرست مسلمانوں کے ساتھ ہی شامل ہے جس سے وہ مسلمانوں کو دھوکہ دیتے ہیں اس موقع پر انہوں نے تمام عاشقان رسول سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ اتحاد امت کے داعی بن کر تحفظ ناموس رسالت کے لیے اپنا کردار ادا کریں تاکہ آزادکشمیر میں قادیانیوں کی اسلام دشمن اور مسلمانوں کو دھوکہ دینے کر غیر مسلم بنانے ارتدادی سرگرمیوں کو روکا جا سکے ،۔ 

 

اگلی خبر پڑہیں پچھلی خبر پڑہیں

ایک ماہ کی مقبول ترین